توبہ کیا ہے؟


توبہ ۔مضمون نمبر ۱
توبہ کیا ہے؟
قرآن میں توبہ کو کچھ یوں بیان کیا گیا ہے۔
۱۔اور جب تمہارے پاس ایسے لوگ آیا کریں جو ہماری آیتوں پر ایمان لاتے ہیں تو (اُن سے) سلام علیکم کہا کرو۔ خدا نے اپنی ذات پر رحمت کو لازم کرلیا ہے کہ جو کوئی تم میں سے نادانی سے کوئی بری حرکت کر بیٹھے پھر اس کے بعد توبہ کرلے اور نیکوکار ہوجائے تو وہ بخشنے والا مہربان ہے [الانعام54:6]
۲۔ہاں جنہوں نے اس کے بعد توبہ کی اور اپنی حالت درست کر لی تو خدا بخشنے والا مہربان ہے[النساء 89:3]
۳: (اے پیغمبر صلی اللہ علیہ وسلم میری طرف سے لوگوں سے) کہہ دو کہ اے میرے بندو جنہوں نے اپنی جانوں پر زیادتی کی ہے خدا کی رحمت سے نا امید نہ ہونا خدا تو سب گناہوں کو بخش دیتا ہے (اور) وہ تو بخشنے والا مہربان ہے [الزمر 53:39]
احادیث
نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کی احادیث میں بھی توبہ کو بہت اہتمام سے موضوع بحث بنایا گیا ہے۔ ان میں سے چند یہ ہیں:
1۔حضرت انس بن مالک رضی اللہ تعالیٰ عنہ آنحضرت صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سے روایت کرتے ہیں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا، کہ اللہ تعالیٰ اپنے بندوں کی توبہ پر اس شخص سے بھی زیادہ خوش ہوتا ہے، جس کا جنگل میں کھویا ہوا، اونٹ اسے پھر دوبارہ مل جائے۔ [صحیح بخاری:جلد سوم:حدیث نمبر 1236 ]
2۔ حضرت ابن عمر رضی اللہ عنہ نے روایت کیا کہ رسول اللہ نے فرمایا لوگو اللہ سے توبہ کرو کیونکہ میں دن میں سو مرتبہ اس سے توبہ کرتا ہوں [صحیح مسلم:جلد سوم:حدیث نمبر 2362]
توبہ کا مفہوم:
توبہ کے لغوی معنی رجوع کرنا اور توجہ کرنا ہیں۔ اسلام میں توبہ کا مطلب گناہوں کو دور کرنے کے لئےاللہ تعالیٰ کی جانب پلٹنا اوررجوع کرنا ہے۔ اسکی کی وضاحت کے لئے ذیل کی مثال پڑھئے:
احمد اپنے گھر سے امتحان دینے کے لئے کراچی یونیورسٹی کی جانب نکلا۔اس نے اسکوٹر نکالی اور اس سڑک پر آگیا جو سیدھی یونیورسٹی جاتی تھی۔ ایک چوراہے پر وہ غلطی سے دائیں جانب مڑ گیا۔ اب یہ غلط راستہ اسے اصل منزل سے دور لے جاتا رہا۔ جب اسے انحراف کا علم ہوا تو وہ اس چوراہے تک واپس لوٹاجہاں سے اس نے غلطی کی تھی۔ اس طرح اس نے وہ شاہراہ پھردوبارہ حاصل کرلی۔اس کے بعد اس نے اسکوٹر تیز چلائی اور پھر نقصان کی تلافی کرلی۔
اس مثال کے تناظر میں اسلام کی توبہ کو سمجھتے ہیں۔
۱۔احمد کی منزل امتحان سے قبل یونیورسٹی پہنچنا ہے جبکہ ایک مسلمان کی منزل آخرت کی کامیابی ہے۔
۲۔احمد کا صراط مستقیم متعین سڑک اور مومن کا صراط مستقیم اللہ کا بتایا ہوا متعین راستہ ہے۔
۳۔احمد کا انحراف غلطی سے مڑ جانا جبکہ مومن کا انحراف اللہ کی نافرمانی یعنی اس کے بتائے ہوئے راستے سے انحراف کرنا ہے۔
۴۔احمد اگر شاہراہ تک نہ لوٹے تو منزل تک نہیں پہنچے گا اور یہی معاملہ مومن کے ساتھ ہے۔
۵۔ اگر احمد واپس لوٹنا ہی نہ چاہے تو وہ امتحان دینے کے معاملے میں غیر سنجیدہ ہے ور یہی معاملہ مومن کابھی ہے
۶۔ لوٹنے میں تاخیر رجوع کو مشکل اور اس کے امکانات کو کم کرتی جاتی ہے ۔
۷۔ احمد غلط راستے کو لوٹے بنا غلطی کو تلافی نہیں کرسکتاتو مومن گناہوں کو چھوڑے بنا رجوع نہیں کرسکتا۔
۸۔ اس رجوع کرنے کو اصلطلاح میں توبہ یعنی رجوع کرنا یا لوٹنا کہتے ہیں۔
۹۔احمد لوٹنے کے بعد اسکوٹر تیز چلا کر غلطی کے اثر کو مٹا دیتا ہے جبکہ مومن کی توبہ یعنی رجوع اگر قبول ہوجائے تو مغفرت کہلاتی ہے جس کا مطلب گناہ کی پردہ پوشی یا اسےڈھانپ لینا ہے۔
۱۰۔توبہ کے بعد سفر ختم نہیں ہوا بلکہ یہ دوبارہ سے شروع ہوا ہے۔ اب صراط مستقیم پر چلنا یعنی عمل صالح کرنا ہے۔

Advertisements

7 responses to this post.

  1. Very beautiful essay! May allh grant you a long life!

    جواب

  2. بہت ہی اچھی مثال سے توبہ اور رجوع کا تصور نمایاں کیا ہے۔ جزاک اللہ خیرا
    استغفر اللہ ربی من کل ذنب و اتوب الیک۔ اللہم انک عفوا کریما تحب العفو فاعف عنی یا رب۔

    جواب

    • اسلام علیکم
      آپ کے فیڈ بیک کا ایک بار پھر شکریہ۔ آپ نے بہت اچھی طرح پیغام کو سمجھا ہے۔ اب اللہ سے یہی دعا ہے کہ وہ ہمیں روبہ کی توفیق دے اور اسے قبول فرمائے۔آمین

      جواب

  3. Posted by seemab qadeer on 14/05/2011 at 9:52 صبح

    By reading this article it has reminded that i should constantly ask 4 forgiveness cause one never knows how many wrong doings one does in a day besides also striving 2 do good 4 the sake of Allah.May the Pakistani people be guided. Ameen.

    جواب

  4. سُبحان اللہ ۔ کتنے سادہ طريقہ سے سمجھايا ہے ۔ اب بھی جسے سمجھ نہ آئے ۔ اُس کا کيا کيا جا سکتا ہے ۔ کہ عام آدمی خيال رکھتے ہيں کہ منہ سے توبہ توبہ کہہ ديا بس کافی ہو گيا

    جواب

تبصرہ کیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s