مذہب اور سائنس

عام طور پر یہ سمجھا جاتا ہے کہ سائینس نے مذہب کا خاتمہ کردیا ہے اور اب مذہب کی کوئی ضرورت باقی نہیں رہی۔ کوئی یہ کہتا نظر آتا ہے مذہب کو اس وقت تک نہیں مانا جاسکتا جب تک کہ وہ سائینسی معیارات پر پورا نہ اتر جائے۔ زیر نظر کتاب میں مولانا وحیدادین خان نے انتہائی خوبصورتی سے مذہب اور سائینس کی حدود کا تعین کیا اور ان کی مطابقت و تفریق کے میدان کو واضح کیا ہے۔ یہ کتاب جدید پڑھے لکھے طبقے کے شبہات رفع کرنے کے لئَے ایک اہم سورس ہے۔ اس کتاب کا کئی زبانوں میں ترجمہ ہوچکا اور یہ کچھ جگہوں پر نصاب میں بھی شامل ہے۔
MazhabAurScience

Advertisements

One response to this post.

  1. جزاک اللہ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    جواب دیجیے

تبصرہ کیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: