کارکردگی جانچنے کا اسلامی کیلکولیٹر


کیلکولیٹر کی خصوصیات:
۱۔ اللہ کے دئیے گئے تقریباً پچانوے فی صد احکامات کی سوالات کی شکل میں ایک مکمل فہرست
۳۔آٹومیٹک طریقے سے اپنا احتساب کرنے کا کیلکولیٹر
۳۔ لازمی اور اختیاری احکامات ( فرض ، نفل، حرام اور مکروہ ) کی پوائنٹس کی شکل میں پریزینٹیشن۔
۵۔ ہر سوال کا قرآن یا مستند حدیث سے حوالہ۔
۶۔ دینی مطالبات کی مختصر تشریح ۔

اردو میں کیلکولیٹر ڈاون لوڈ کرنے کے لئے نیچے کلک کریں
ایکسل 2007
کارکردگی جانچنے کا اسلامی کیلکولیٹر

ایکسل 2003
کارکردگی جانچنے کا اسلامی کیلکولیٹر


انگلش میں کیلکولیٹر ڈاون لوڈ کرنے کے لئے نیچے کلک کریں۔
Excel 2007

Analytical Calculator for Islamic Personality

Excel 2003
Analytical Calculator for Islamic Personality
تعارف پڑھنے کے لئے نیچے اسکرول کریں۔

تعارف
اسلام کے لغوی معنی سلامتی، اطاعت، سپرد کردینا یا حوالے کردینا ہے۔ اصطلاح میں اس سے مراد خود کو خدا کی اطاعت اور بندگی میں دینا ، اپنی ہر خواہش، ارادے اور عمل کو خدا کی مرضی کے تابع کردینا ہے۔اللہ تعالیٰ نے انسان کو اپنی مرضی سے آگاہ کرنے کے لئے خاص اہتمام کیا۔ اس نے ہر انسان کی فطرت میں اچھائی اور برائی کا شعور رکھ دیا (الشمس ۹۱:۸) شریعت نازل کی(الجمعہ ۶۲:۲) اور پھر پیغمبروں کی عملی زندگی سے اپنے مطلوب طرز حیات کا نمونہ پیش کردیا۔ اس اہتمام کے بعد انسانوں کو اختیار دیا کہ وہ خدا کی بندگی اختیار کرتے ہیں یا اس کے برخلاف طرز عمل کا مظاہرہ کرتے ہیں۔
آج ہم میں سے ہر شخص اس اختیار و ارادے کی آزمائش سے گذررہا ہے ۔اس امتحان میں کامیابی کا نتیجہ کبھی نہ ختم ہونے والی جنت اور ناکامی کا انجام ہمیشہ کی جہنم ہے۔ امتحان میں کامیابی کا پہلا مرحلہ علم، دوسرا مرحلہ عمل اور تیسرا اسٹیج احتساب ہے۔ چنانچہ اس عظیم آزمائش میں کامیابی کے لئے لازم ہے کہ ہم اللہ کے احکامات کا علم حاصٖ کریں، اس پر عمل کریں اور پھر اپنا احتساب کرکے یہ دیکھیں کہ ہم کہاں کھڑے ہیں۔یہ خود احتسابی ایک مڈٹرم امتحان کی طرح ہے جو ہمیں یہ بتاتا ہے آیا ہم صحیح سمت میں سفر کررہے ہیں یا نہیں۔
ہم جانتے ہیں کہ ایک دن آنے والا ہے جب ہم سب اللہ رب العزت کے حضور تنہا کھڑے ہوکر اپنے علم و عمل کا حساب دیں گے۔ اللہ تعالیٰ ہم سے پوچھیں گے کہ ہم نے اس کے احکامات پر عمل کیا یا نہیں۔ اگر کیا تو کتنا کیا اور اگر نہیں کیا تو کیوں نہ کیا۔ موجودہ سوالنامہ اسی جواب دہی اور پیشی کی ایک تیاری ہے۔عقلمندی اس بات میں ہے کہہم اللہ کی طرف سے سوال اٹھائے جانے سے قبل خود سے سوال کریں اور جانیں کہ ہم کس حد تک اپنے رب کی ہدایات پر عمل کرتے اور اسکی مرضی کے تحت زندگی گذارتے ہیں۔

Advertisements

3 responses to this post.

  1. السلام علیکم محترم
    اسے ڈانلوڈ کرلیا ہے، ایسا معلوم ہوتا ہے کہ ایکسل 2007+ کا ہونا ضروری ہے۔ کیا واقعی ایسا ہی ہے۔؟

    جواب دیجیے

  2. Posted by ممتازعلی on 11/01/2013 at 8:52 صبح

    پروفیسر عقیل صاحب آپ کی تحریر پرمغز ہوتی ہیں

    جواب دیجیے

تبصرہ کیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s