میرے رب


میرے رب!
میرا اب جی یہ چاہتا ہے
کہ اپنی ذاتِ خلوت سے
فریب نفس کی اس جلوت سے
ہجومِ ستمگراں، اس دنیا کی
ہر نسبت سے
جو تجھ سے دور کرے
ہر اس "نعمت” سے
ناطہ توڑ کر اپنا
تعلق توڑ کر اپنا
تیری منزل کی جانب
کہیں روپوش ہو جاؤں
میں اک درویش ہو جاؤں

از: سید اسراراحمد

Advertisements

تبصرہ کیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s