نیوزی لینڈ کا سانحہ


ڈاکٹر محمد عقیل
نیوزی لینڈ کے سانحے پر غیر مسلموں کے دو کردار سامنے آئے۔ ایک کردار اس دہشت گرد کا ہے جس نے نسلی اور مذہبی بنیادوں پر معصوم مسلمانوں کا بے رحمانہ قتل عام کیا۔ دوسرا کردار نیوزی کی لینڈ کی وزیر اعظم اور

عوام کا ہے جنہوں نے شہداء کے لواحقین کو سینے سے لگایا ، ان کے لیے شمعیں روشن کیں اور ان کے غم میں آنسو بہا کر رنگ ، نسل اور مذہب سے بالاتر ہوکر اعلی اخلاقی اقدار کا ثبوت دیا۔ یہ ایک ہی نسل کے دو متضاد کردار ہیں۔ ایک نفرت ، تشدد، نسلی تعصب اور بے رحمی کی علامت۔ دوسرا محبت، امن، عدم تعصب اور رحمدلی کا علمبردار۔ اس سانحے کے رد عمل میں ہماری سوسائٹی میں بھی دو قسم کے کردار سامنے آئے۔ ایک وہ جنہیں صرف دہشت گرد کا فعل نظر آیا اور انہوں نے اسے پوری سفید فام اور غیر مسلم نسل پر منطبق کردیا۔ ان کا مطالبہ ہے کہ اسی نسلی اور مذہبی بنیادوں پرگوروں اور غیر مسلموں کے خلاف انتقامی کاروائی کی جائے ۔دوسری قسم کے لوگ وہ ہیں جو محض مرعوبیت کی بنا پر گوروں کے گن گانے میں مصروف ہیں ۔یہ لوگ مسلمانوں ہی کو تنقید کا نشانہ بنانے پر تلے ہیں اور اس دہشت گردی کی کاروائی کو یکسر نظر انداز کررہے ہیں جو اسی قوم کے ایک فرد نے کی ہے۔ یہ دونو ں رویے چیزوں کو بلیک اینڈ وہائٹ میں دیکھنے کی غلط عادت ہے جو حقیقت کے خلاف ہے۔ حق بات یہ ہے کہ اس شخص کا رویہ دہشت گردی اور قابل مذمت ہے۔لیکن اس مذمت کا مطلب انتقامی کاروائی نہیں بلکہ ڈائیلاگ اور اچھے اخلاقی رویے کے ذریعے اپنی بات غیر مسلموں کو پہنچانا ہے۔ اسی طرح نیوزی لینڈ کی وزیر اعظم اور عوام کا مثبت رویہ قابل تعریف اور لائق تحسین ہے اور یہی وہ اخلاقی رویہ ہے جو ہم مسلمانوں سے غیر مسلموں کے لیے مطلوب ہے۔سفید فام دہشت گرد اور سفید فام نیوزی لینڈ کی ہمدردقوم ، یہ ایک ہی نسل کے دو کردار ہمارے سامنے ہیں۔ اب یہ ہم پر منحصر ہے کہ ہم مثبت اور اعلی اخلاقی کردار کی تقلید کرتے ہیں یا منفی کردار کا تعصب ، نفرت اور تشدد پر مبنی رویہ اختیار کرتے ہیں۔

Advertisements

تبصرہ کیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s