ہماری قوم کا حقیقی المیہ

یہ محسوس کیا جاتا ہے کہ پاکستان میں معاشرے اور حکمرانی میں پائی جانے والی اکثریت کی برائیوں کی اصل وجہ صرف ایک ہی وجہ نہیں بلکہ کثیر حقائق ہے جس کو پاکستان کی مربع وجہ کہا جاسکتا ہے۔ یہ مربع چار ستونوں پر مشتمل ہے جس میں پہلا عدم اہلیت ، دوسرا بزدلی ، تیسرا لالچ اور چوتھا اور سب سے زیادہ تباہ کن غرور / غلط فخر ہے۔یہ مشاہدہ کیا جاتا ہے کہ یہ مسئلہ پاکستان کے تقریبا تمام آئینی اداروں میں غالب ہے اور عام طور پر پاکستان کے لوگوں کے کردار میں بھی اس کی گہری جڑیں ہیں۔ یہ ایک آفاقی حقیقت ہے کہ گھر معاشرے کی واحد اور بنیادی اکائی ہے اور اس کی تصدیق متعدد سروے اور اطلاعات کی رائے کی بنیاد پر کی جاتی ہے کہ پاکستان میں اکثریت والے افراد کا تخمینہ کل بالغ افراد میں 75٪ سے زیادہ ، ایک طرح سے ہو یا کسی اور طرح سے اس مربع مقصد کی ایک یا تمام شکلوں میں دل کی گہرائیوں سے ملوث ہے۔یہ دیکھا جاتا ہے کہ عام طور پر پاکستان میں لوگ متکبر اور لالچی ہوتے ہیں اور اپنے بنیادی فرائض اور تقاضوں کو بھی پورا کرنے کے لئے ، تعلیم اور ہنر کی ترقی پر کوئی دھیان نہیں دیتے ہیں اور اس طرح اپنی بنیادی خواہشات کو پورا کرنے کے لئے نااہل رہتے ہیں۔ اس نااہلی نے انہیں کمزور کردیا ہے اور اس طرح جب وہ انفرادی یا اجتماعی حقوق کے لئے لڑنے کی بات کرتے ہیں تو وہ بزدلی کا مظاہرہ کرتے ہیں۔ یہ بزدلی ان لوگوں کو راستہ فراہم کرتی ہے جو ایسے نااہل اور لالچی افراد کا استحصال کرنا جانتے ہیں اور یوں سوسائٹی خود ان افراد / گروہوں کا یرغمال اور شکار بن چکی ہے جو اقتدار کے بھوکے (لالچی) اور متکبر ہیں۔ کمزور اور مضبوط افراد / گروہوں کا یہ مرکب ایک عنصر کے نتیجے میں نکلتا ہے ، جسے بدعنوانی کہا جاسکتا ہے اور سمجھا جاتا ہے۔ لہذا ہمیں اس بات پر اتفاق کرنے کی ضرورت ہے کہ بدعنوانی بنیادی وجہ نہیں بلکہ معاشرے کے اجتماعی سلوک اور شناخت کی پیداوار ہے اور ان لوگوں میں جھلکتی ہے جو کسی بھی طرح سے حکمرانی کررہے ہیں۔لہذا ، پاکستانی عوام کو موجودہ حالات کے ذریعہ سختی سے متنبہ کیا گیا ہے کہ وہ اپنے طرز عمل اور ارادوں کو درست کریں اور انہیں فطرت کے قوانین اور باہمی دلچسپی اور فلاح و بہبود کے مطابق بنائیں۔ اگر وہ ایسا کرتے ہیں تو ان کو خدائی فضل و کرم کی فراوانی مہیا کی جائے گی ، لیکن اگر وہ اس میں ناکام ہوگئے تو اس کے زیادہ سنگین نتائج برآمد ہوں گے۔ اس کے مقابلے میں جو وہ کاٹ رہے ہیں۔کامران نثار

تبصرہ کیجئے

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: