Archive for the ‘مضامین’ Category

دولت کی فراہمی کا خدائی نظام


(Divine System of Wealth Distribution)
ڈاکٹر محمد عقیل
دولت کیسے حاصل کی جاتی ہے؟ کیا دولت مند ہونا محض مقدر کا کھیل ہے؟ کیا یہ صرف محنت پر منحصر ہے؟ کیا دولت کے حصول میں ناجائز اور جائز کا بھی کوئی فرق ہے ؟ کیا دولت دینے میں خدا یا قسمت کا کوئی کردار ہے؟ آخر یہ کیا وجہ ہے کہ کچھ لوگ بے پناہ دولت مند ہوتے ہیں اور کچھ کو دو وقت کی روٹی بھی نصیب نہیں ہوتی؟ ان سوالات کے ساتھ ساتھ دیگر اہم امور جو دولت کے حصول سے متعلق ہیں ، ان کا آج کے مضمون میں ہم تفصیل اور سائنٹفک طریقے سے جواب دیں گے۔
تحریر اردو میں ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے نیچے کلک کریں
Divine System of Wealth Distribution Final

Advertisements

توجہ کا اکرام


اکثر دیکھنے میں آیا ہے کہ نماز پڑھتے وقت ہماری توجہ نماز کی بجاۓ دوسری جانب مبذول ہو جاتی ہے. اس میں شیطانی وسوسوں کا بھی بڑا دخل ہے کہ ابلیس نے اللہ تعالیٰ سے انسان کو ورغلانے کاوعدہ کیا تھا.اور وہ آپ کا دھیان دوسری طرف مبذول کرانے میں کامیاب ہو جاتا ہے. کو پڑھنا جاری رکھیں

لیبر ڈے اور ہم


ڈاکٹر محمد عقیل
لیبر کے حوالے سے ہمارے ہاں چند غلط تصورات پائے جاتے ہیں۔ پہلا تصور لیبر کو مزدور سمجھنا ہے۔ ہمارے ہاں لیبر سے مراد اینٹیں اٹھانے والامزدور ،نائی ، موچی یا ہاتھ سے کام کرنے والا کوئی شخص سمجھا جاتا ہے۔ جبکہ اکنامکس میں لیبر سے مراد ہر وہ شخص ہے جو اپنی سروسز یعنی خدمات دے کر اس کے بدلے میں اجرت یا سیلری لیتا ہے۔ کو پڑھنا جاری رکھیں

علم کے درجات


تحریر : ڈاکٹر محمد عقیل

"علم کے کتنے درجات ہوتے ہیں؟”
حضرت نے مجھ سے پوچھا۔ سوال بڑا اچانک تھا اور ادب بھی ملحوظ خاطر تھا اس لیے یہی جواب بن پڑا۔
کو پڑھنا جاری رکھیں

فطرت و وحی


اداریہ
میرے دوستو! مذہب کا مفہوم ہے ” راستہ”۔ یعنی مذہب دراصل وہ راستہ ہے جس کے ذریعے خدا تک پہنچا جاتا ہے۔کم و بیش ہر مذہب اپنی نسبت خدا سے کرتا ہے کہ وہی سچا اور واحد راستہ ہے۔ ہر مذہب دیگر مذاہب کو غلط ثابت کرنے کی کوشش کرتا اور خود کو سراپا حق بنا کر پیش کرتا ہے۔ہر مذہب دیگر مذاہب کے ماننے والوں سے تقاضا کرتا ہے کہ وہ باطل مذہب کو چھوڑ کر دین حق کو قبول کرلیں۔ ہر مذہب کے پاس اپنی صداقت کو بیان کرنے کے لیے کچھ نہ کچھ دلائل کو پڑھنا جاری رکھیں

قوم کی اصلاح کیسے؟


قوم کی اصلاح کیسے؟
از: ڈاکٹر محمد عقیل

ملک و قوم کی اصلاح کے دوماڈل ہیں۔ایک یہ کہ قانون کا نفاذ ہی تمام مسائل کا حل ہے۔ دوسرا یہ کہ قوم کی تربیت کے بنا قانون کا نفاذ ممکن نہیں۔ پہلے گروہ کی دلیل امریکہ ،کینڈا جیسے ممالک ہیں جہاں سب پاکستانی اور انڈین جاکر قانون کی پاسداری شروع کردیتے ہیں۔ دوسرے گروہ کا کہنا ہے کہ وہاں چونکہ اکثریت تعلیم یافتہ اور سمجھدار ہے اس لیے ایک عام پاکستانی یا انڈین اقلیت میں ہونے کی بنا پر قانون فالو کرنے پر مجبور ہوتا ہے کو پڑھنا جاری رکھیں

کیا قربانی قبول ہوئی؟ ڈاکٹر محمد عقیل


بسم اللہ الرحمٰن الرحیم
کیا قربانی قبول ہوئی؟ ڈاکٹر محمد عقیل
• "حضرت قربانی سے متعلق کچھ ارشاد فرمائیں۔”
پوچھو کیا پوچھنا ہے۔
• قربانی کی بنیادی شرط کیا ہے ؟
میاں ! قرآن میں آتا ہے کہ اللہ کو تمہارا گوشت اور خون نہیں پہنچتا بلکہ تقوی پہنچتا ہے۔ ۔ یاد رکھو! قربانی میں اصل اہمیت تقوی کی ہے گوشت اور خون کی نہیں۔ تقوی کے بنا سارے جانورگوشت اور خون ہیں جو کتنے ہی بڑے اور کتنے ہی قیمتی ہوں لیکن خدا کے نزدیک ان کی کوئی اہمیت نہیں۔ تقوی ہو تو محض ناخن کاٹنے پر ہی خدا قربانی کا اجر دے دیتا ہے اور تقوی نہ ہو تو کروڑوں کی نام نہاد قربانی منہ پر مار دی جاتی ہے کو پڑھنا جاری رکھیں